[ریکارڈز] مصباح کا لگاتار 75 مقابلوں میں کپتانی کا سلسلہ تھم گیا

پاکستان اور آسٹریلیا کے مابین تیسرے ایک روزہ کے ساتھ پاکستان کے کپتان مصباح الحق کا مسلسل 75 میں قیادت کرنے کا سلسلہ تھم گیا۔

ایک روزہ کرکٹ میں مسلسل سب سے زیادہ ایک روزہ مقابلوں میں قیادت کے فرائض انجام دینے کا ریکارڈ جنوبی افریقہ کے ہنسی کرونیے کے پاس ہے جنہوں نے دسمبر 1994ء سے لے کر مارچ 2000ء تک مسلسل 130 مقابلوں میں پروٹیز کی کپتانی کی۔ کرونیے کے علاوہ دنیا کا کوئی کپتان مسلسل 100 یا اس سے زیادہ مقابلوں میں قیادت نہیں کر پایا۔

بھارت کے اظہر الدین نے لگاتار 98 مقابلوں میں قیادت کی تھی جبکہ جنوبی افریقہ کے شان پولاک کو مسلسل 89، سری لنکا کے مہیلا جے وردھنے کو 85 اور زمبابوے کے ایلسٹر کیمبل کو متواتر 76 مقابلوں میں میں کپتانی ملی۔

پاکستان کے مصباح الحق نے آسٹریلیا کے خلاف جاری سیریز کے دوسرے مقابلے میں جب کپتان کی حیثیت سے ٹاس کیا تو یہ ان کا مسلسل 75 واں مقابلہ تھا جب وہ قائد کی حیثیت سے میدان میں اترے۔ یہ سلسلہ مزید آگے بڑھتا اور جیسا کہ پاکستان عالمی کپ 2015ء کے لیے بھی قیادت مصباح کے سپرد کرچکا ہے لیکن سخت تنقید اور سیریز میں شکست کے بعد مصباح تیسرے ایک روزہ مقابلے سے دستبردار ہوگئے جہاں قیادت کے فرائض شاہد آفریدی انجام دے رہے ہیں۔ شاہد کو پاکستان نے حال ہی میں ایک مرتبہ پھر ٹی ٹوئنٹی کا کپتان مقرر کیا ہے ۔

مصباح الحق نے مئی 2011ء میں دورۂ ویسٹ انڈیز سے اکتوبر 2014ء تک مسلسل ساڑھے تین سال تک تمام ایک روزہ مقابلوں میں پاکستان کی قیادت سنبھالی، جس میں پاکستان کے میچز کی تعداد 75 بنتی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  [ریکارڈز] رونکی اور ایلیٹ کی غیر معمولی رفاقت

مصباح سے قبل پاکستان کی جانب سے سب سے زیادہ لگاتار ون ڈے میچز میں کپتانی کا اعزاز وقار یونس کے پاس تھا جنہوں نے اپریل 2001ء سے نومبر 2002ء کے دوران 47 ایک روزہ مقابلوں میں قیادت کی تھی۔ ان کے بعد سلیم ملک اور شاہد آفریدی نے مسلسل 33 مقابلوں میں کپتانی کی تھی۔

موجودہ کپتانوں میں سے اس فہرست میں بھارت کے مہندر سنگھ دھونی کا نام شامل ہے، جنہوں نے ستمبر 2007ء سے دسمبر 2009ء تک مسلسل 69 مقابلوں میں بھارت کی قیادت کی۔

آپ لگاتار ایک روزہ مقابلوں میں قیادت کے فرائض انجام دینے والے کپتانوں کی فہرست ذیل میں دیکھ سکتے ہیں:

کپتان ملک مقابلوں کی تعداد از تا
ہنسی کرونیے  جنوبی افریقہ 130 دسمبر 1994ء مارچ 2000ء
اظہر الدین  بھارت 98 دسمبر 1991ء مئی 1996ء
شان پولاک  جنوبی افریقہ 89 اپریل 2000ء مارچ 2003ء
مہیلا جے وردھنے  سری لنکا 85 مارچ 2006ء فروری 2009ء
ایلسٹر کیمبل  زمبابوے 76 اگست 1996ء اکتوبر 1999ء
مصباح الحق  پاکستان 75 مئی 2011ء اکتوبر 2014ء
مہندر سنگھ دھونی  بھارت 69 ستمبر 2007ء دسمبر 2009ء
دلیپ مینڈس  سری لنکا 60 مارچ 1986ء اکتوبر 1987ء
اسٹیفن فلیمنگ  نیوزی لینڈ 56 مارچ 1999ء فروری 2001ء
ارجنا راناتنگا  سری لنکا 55 جنوری 1996ء جنوری 1998ء

Facebook Comments