ٹیگ محفوظات

عالمی کپ 1992ء

جب پاکستان کو دنیا کی حکمرانی ملی

آج 25 مارچ ہے اور اس پاکستان کرکٹ کی تاریخ کے اس یادگار دن کو گزرے 26 سال ہو چکے ہیں جب میلبرن کرکٹ گراؤنڈ پر پاکستان نے آخری بار عالمی کپ جیتا تھا۔ ورلڈ کپ 1992ء میں کل 9 ٹیمیں کھیلی تھیں اور یہ راؤنڈ رابن طرز پر ہوا تھا، یعنی تمام ہی…

عالمی کپ 1992ء کی مکمل داستان، ایک دستاویزی فلم میں

عالمی کپ 1992ء آج تک صرف اس لیے یاد نہیں کیا جاتا کیونکہ یہ پاکستان جیتا تھا بلکہ جدتوں اور کئی انتظامی خوبیوں کی وجہ سے بھی اس ٹورنامنٹ نے نئے معیارات مرتب کیے۔ تاریخ میں پہلی بار کسی عالمی کپ ٹورنامنٹ میں رنگین ملبوسات استعمال کیے گئے،…

عالمی کپ کے 30 جادوئی لمحات: ملتان کا سلطان

عالمی کپ 1992ء کے ابتدائی مقابلوں میں پے در پے شکستوں کے بعد جب پاکستان باہر ہونے کے بالکل قریب تھا، عمران خان کے "دیوار سے لگے شیروں" نے آخری کوشش کی اور آسٹریلیا، سری لنکا اور نیوزی لینڈ جیسے سخت حریفوں کو شکست دے کر سیمی فائنل تک پہنچ…

عالمی کپ کے 30 جادوئی لمحات: بڑا بول، ڈبہ گول

عالمی کپ 1992ء میں شریک تمام 9 ٹیموں کو ایک دوسرے کے خلاف کم از کم ایک مقابلہ ضرور کھیلنا تھا۔ 18 مارچ 1992ء کو پہلے مرحلے کا آخری دن تھا اور اس روز تین مقابلے کھیلے گئے جن میں سے دو کی اہمیت بہت زیادہ تھی۔ پاکستان کو سیمی فائنل تک رسائی کے…

عالمی کپ کے 30 جادوئی لمحات: پاکستان کے لیے باران "رحمت"

بارش کو برصغیر میں باران رحمت کہا جاتا ہے لیکن کرکٹ کے کھیل کے لیے بارش سے بڑی کوئی زحمت نہیں۔ کھلاڑیوں اور تماشائیوں کی میدان میں موجودگی اور ٹیلی وژن پر نظریں جمائے مقابلے کے منتظر شائقین کو بارش سے بڑی کوفت ہوتی ہے لیکن یکم مارچ 1992ء…

‎عالمی کپ کے 30 جادوئی لمحات: جونٹی رہوڈز کی "پرواز"

1992ء کا عالمی کپ کئی لحاظ سے یادگار تھا۔ صرف اس لیے نہیں کہ پاکستان نے جیتا، بلکہ اس لیے کہ یہ ہر لحاظ سے ایک جدید ٹورنامنٹ تھا۔ عالمی کپ کی تاریخ میں پہلی بار رنگین ملبوسات، سفید گیندوں، فیلڈنگ پابندیوں اور برقی قمقموں کا استعمال کیا گیا…

[آج کا دن] 22 سال پہلے 22 گز پر بادشاہت!

عالمی کپ میں پاکستان کی جیت کو 22 برس بیت گئے ہیں لیکن ان تاریخی لمحات کی یادیں ذہن میں اس طرح تازہ ہیں جیسے یہ کل کی ہی بات ہو ۔ شاید میری عمر کے لوگوں کے لیے یہ جیت کرکٹ کا جنون بلندیوں تک پہنچانے کے لیے پرفیکٹ تھی کیونکہ ٹین ایج میں قدم…

[انفوگرافک] کرکٹ عالمی کپ 1975ء تا 2015ء

عالمی کپ 2015ء کے آغاز میں اب صرف ایک سال کا عرصہ رہ گیا ہے۔ آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ میں طے شدہ عالمی کپ اپنے سلسلے کا 11 واں ٹورنامنٹ ہوگا جو ٹھیک ایک سال بعد 14 فروری 2015ء کو نیوزی لینڈ اور سری لنکا کے مابین کرائسٹ چرچ میں مقابلے سے شروع…

جونٹی کے ہاتھوں انضمام کا رن آؤٹ عالمی کپ 92ء کا یادگار ترین منظر تھا: سچن تنڈولکر

عالمی کپ 1992ء کی یادوں کو تازہ کرنے کے لیے بین الاقوامی کرکٹ کونسل کے اہم کھلاڑیوں سے انٹرویوز کا سلسلہ جاری ہے جس میں عمران خان اور انضمام الحق کی یادیں تو آپ کی نظروں سے گزری ہی ہوں گی اور اب لٹل ماسٹر سچن تنڈولکر نے بھی مذکورہ ٹورنامنٹ…

عالمی کپ 1992ء اور انضمام الحق کی یادیں

پاکستان کو 1992ء کا عالمی کپ جیتے ہوئے 21 سال سے زیادہ کا عرصہ بیت چکا ہے، لیکن آج بھی وہ لمحات کھلاڑیوں کے ذہنوں میں ایسے نقش ہیں جیسے یہ کل کی ہی بات ہو۔ اب ایک مرتبہ پھر عالمی کپ 2015ء میں آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ میں کھیلا جائے گا…